اہم خبریں

سال 2021 ایک اور صدمہ دے گیا : نام ور ترقی پسند دانشور پروفیسر عابد عمیق انتقال کر گئے

ملتا ن : نامور ترقی پسنددانشور،پنجابی و سرائیکی کے شاعر اور ماہرتعلیم پروفیسر عابد عمیق 31 دسمبر جمعہ کے روز انتقال کرگئے۔ ان کی عمر 81برس تھی اوروہ طویل عرصے سے صاحب فراش تھے۔ پروفیسر عابد عمیق انگریزی کے استاد تھے۔انہوں نے گورنمنٹ کالج مظفرگڑھ سے اپنے کیریئرکاآغاز کیا۔اپنے ترقی پسند نظریات کی وجہ سے انہیں ضیاءالحق کے دور میں قید وبند کی صعوبتیں برداشت کرناپڑیں۔ انہیں 1981ءمیں ڈاکٹر صلاح الدین حیدر کے ہمراہ گرفتار کیا گیا ۔پروفیسر عابد عمیق کو ساہیوال جیل اور ڈاکٹر صلاح الدین حیدر کو شاہی قلعہ لاہور منتقل کردیاگیا۔چھ ماہ بعد رہائی عمل میں آئی توان کا تبادلہ ناڑہ کنجور کردیاگیا۔
ڈاکٹر صلاح الدین حیدر نے گردوپیش کے ساتھ بات چیت کے دوران بتایا کہ ہم دونوں ناڑہ کنجور میں چھب کالج میں چارسال تدریس کے فرائض انجام دیتے رہے۔یہ دور ہم دونوں کو ایک دوسرے کے بہت قریب لے آیا۔ وہ واضح نظریات رکھتے تھے ۔پنجابی اورسرائیکی میں ان کی شاعری کو بھرپور پذیرائی ملی۔ عابد عمیق کی کتاب ”تل وطنی“ کے نام سے منظرعام پرآئی۔ڈاکٹر صلاح الدین حیدر نے کہاکہ پروفیسر عابد عمیق طویل عر صہ سے تقریبات سے دورتھے اوراپنے گھر تک محدود ہوگئے تھے۔عابدعمیق کی نمازجنازہ بعد نمازعصر چاربجے سہ پہر مسجد جلال باقری میں ادا کی جائےگی۔

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker