حنا عنبرینشاعریلکھاری

محبت یاد کی خوشبو ۔۔ حنا عنبرین

محبت یاد کی خوشبو ۔۔ حنا عنبرین

محبت یاد کی خوشبو !!!
طنابیں کھینچ کر میری
مجھے مجبور کرتی ہے
بہت رنجور کرتی ہے
کبھی نزدیک لے آتی ہے شہ رگ سے
کبھی یک لخت خود سے دور کرتی ہے
محبت زندگانی ہے
یہ جاں لیتی ہے اجرت میں
جلاتی ہے مگر پرنور کرتی ہے
محبت چھپ نہیں سکتی
یہ جس کے دل میں پیدا ہو اسے مشہور کرتی ہے
محبت اپنے فرزانوں کو بھاتی ہے،
سفر کی جوت آنکھوں میں جگاتی ہے
نئے رستے دکھاتی ہے
محبت ہے خماری بھی محبت بے قراری بھی
کبھی بنتی ہے خوابوں کا سفر ہر دم
کبھی بیدار کرتی ہے
کبھی ذہنی اذیت سے مجھے دوچار کرتی ہے
محبت ذہن کی آلائشوں کو پاک کرتی ہے
کلیجے چاک کرتی ہے
دلِ کج فہم کی ہر کج روی کو خاک کرتی ہے
حیاداری کبھی بخشے کبھی بے باک کرتی ہے
کبھی تعمیر کرتی ہے کبھی مسمار کرتی ہے
کبھی مرہم لگاتی ہے کبھی افگار کرتی ہے
کبھی تخلیق کرتی ہے کبھی ترمیم کرتی ہے
کبھی ضربیں لگاتی ہے کبھی تقسیم کرتی ہے
اسی کی بات کرتی ہے
اسی کا نام لیتی ہے
اگر گرنے لگے کوئی
محبت تھام لیتی ہے
محبت زندگانی کی حقیقت ہے
یہ سارا کائناتی حسن بھی مرہونِ منت ہے محبت کا !!!

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker