اختصارئےلکھاریملک مزمل عباس

ملک مزمل عباس کا اختصاریہ : چندہ پاکستان اور چندا پاکستان

جس ملک کے پرائم منسٹر سے لیکر این جی اوز تک اور مسجدوں مدرسوں تک گورنمنٹ اسکول سے لے کر گورنمنٹ ہسپتالوں تک محفل نعت مجالس ٹورنا منٹ اور سیاسی جلسوں تک صرف چندے پر بھروسہ کیا جاتا ہے اس ملک میں تعلیم کی روشنی کیسے پھیلے گی ہیلتھ آگے کیسے بڑھے گی ؟
ہم پاکستانی قوم کم لیکن مانگنے والی قوم زیادہ مشہور ہو چکے ہیں اگر الیکشن آگئے ہیں حکومت بنانے والا بھی اور اپوزیشن والے بھی دونوں چندے سے ہی گزارہ کر رہے ہیں اور جو لوگ ان لوگوں کو چندہ دیتے ہیں وہ آگے اپنے نیچے والوں کی خون پسینے کی کمائی چھین کر گزارہ کر رہے ہیں یہی سلسلہ نچلے طبقے تک جاری ہے اگر کوئی مسجد بنوا رہا ہے تو وہ پورے زور و شور کے ساتھ لوگوں سے چندہ وصول کر رہا ہے اگر گورنمنٹ اسکول کے کمرے بنوانے ہیں تو پھر بھی چندہ ضروری ہے اگر سرکاری ہسپتال کی بلڈنگ کا معاملہ ہے یا پھر مشینری کا معاملہ ہے تو بھی چندہ ضروری ہے اب تو کہنے کو دل کرتا ہے کہ بانی پاکستان قائد اعظم محمد علی جناح کو پاکستان کا نام چندہ پاکستان رکھنا چاہیے تھا تاکہ جو لوگ پاکستان سے واقف نہ تھے وہ اس کو خوبصورت پاکستان کا نام لکھا ہوا سمجھتے اور پاکستان کو چاند کے نام سے تشبیہ دی جاتی اور جو لوگ پاکستان کی حقیقت سے واقف ہوتے ان کو معلوم ہوتا یہ چاند پاکستان نہیں چندہ پاکستان ہے اور وہ کوئی میں ہمیشہ ڈوبتی ہیں جو دوسروں کی طرف دیکھ کر اپنے آپ کو بنانا چاہتی ہیں۔
کہتے ہیں کہ اگر یورپ سے اتنے ڈالر ہمارے پاس آئیں گے تو ہمارا ملک اتنی ترقی کرے گا تو وہ ڈالر زکوۃ کے خیرات کے صدقے کے ہوتے ہیں مطلب دوسرے ملک اپنی مصیبت ٹالنے کے لیے وہ ڈالر ہم جیسے منگتوں کو دیتے ہیں اور ہم ان ڈالروں کو اپنی ترقی سمجھتے ہیں کوئی ملک ہمیں چاول کی صورت میں تو کوئی کھجور کی صورت میں ہمیں اپنی اترن دے کر اپنی مصیبت ٹالتا ہے اور ہم اس کو اپنی ترقی کا راز سمجھتے ہیں پاکستانی قوم کے لئے چندہ اتنا ہی ضروری ہوگیا ہے جتنا کہ ننگے جسم کے لئے کپڑا ضروری ہے اگر ننگے جسم والے کو کپڑا نہ دیا جائے تو وہ قید ہو کر رہ جاتا ہے اسی طرح اس ملک کو اگر چندا نہ ملے تو یہ اپنے آپ کو قید ہی نہیں بلکہ مردہ حالت میں تسلیم کرتے ہیں اب جا کر میرے ذہن نے تسلیم کیا کہ پاکستان کے لیے چندہ بہت ضروری ہے اگر یہ چندہ نہ ملا تو پاکستان کی ترقی نہیں ہوگی پاکستان دنیا کے نقشے میں نظر نہیں آئے گا اور پاکستان کو کوئی کیسے پہچانے گا اب بھی وقت ہے قائداعظم محمد علی جناح کی روح سے معافی مانگ کر پاکستان کا نام چندہ پاکستان رکھ لو کیونکہ کچھ ہو نا ہو چندہ ضروری ہے

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker