اہم خبریں

گدی کا تنازع : سرگودھا میں پیر کے ہاتھوں 20 مرید قتل

سرگودھا : سرگودھا کے نواحی گاؤں میں درگاہ کے ‘متولی’ نے مبینہ چارساتھیوں کی مدد سے اپنے 20 مریدوں کو لاٹھیوں اور چاقو کے وار سے قتل کر دیا چار افراد زخمی ہوگئے۔ سرگودھا کے ڈپٹی کمشنر لیاقت علی چھٹہ نے بتایا کہ واقعے کی اطلاع ڈی ایچ کیو ہسپتال سرگودھا میں آنے والی ایک زخمی خاتون نے دی تھی جو درگاہ سے زندہ بچ نکلنے میں کامیاب ہوگئی تھی۔ یہ واقعہ سرگودھا کے نواحی علاقے چک نمبر 95 شمالی میں موجود ایک درگاہ پر پیش آیا۔درگاہ کے متولی عبدالوحید کو اس کے 4 ساتھیوں سمیت گرفتار کر لیاگیا ہے جبکہ 19 افراد کی لاشیں برآمد کرکے انھیں اور کچھ زخمیوں کو ڈی ایچ کیو ہسپتال منتقل کیا گیا۔ ابتدائی تفتیش کے مطابق درگاہ علی محمد گجر 2 سال قبل آبادی سے دور تعمیر کی گئی تھی، اور ابتدائی تحقیقات میں درگاہ پر دو گروپوں کے درمیان گدی نشینی کے معاملے پر کچھ عرصے سے تنازع چل رہا تھا۔ ڈی سی سرگودھا کے مطابق زخمی خاتون نے پولیس کو بتایا تھا کہ متولی نے گذشتہ روز سے اپنے مریدوں کو بلا کر قتل کرنے کا سلسلہ شروع کر رکھا تھا۔ ملزم اپنے مریدوں کو فون کرکے بلاتا تھا اور ایک ایک کرکے ان کو کمرے میں بلا کر قتل کرتا رہا۔

فیس بک کمینٹ

متعلقہ تحریریں

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker