اہم خبریں

عمران خان اور نریندر مودی نے کرتار پورراہداری کا افتتاح کر دیا

نارووال : وزیرِ اعظم عمران خان نے گرودوارہ دربار صاحب کرتار پور کی نئے سرے سے تعمیر اور انڈین یاتریوں کے لیے تیار کی گئی راہدرای کا افتتاح کر دیا ہے۔ وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ کرتارپور سرحد کھول کر سکھوں کے دل خوشیوں سے بھر دیے۔



افتتاحی تقریب میں انڈیا کے سابق وزیر اعظم منموہن سنگھ، نوجوت سنگھ سدھو اور اداکار سنی دیول سمیت بڑی تعداد میں سکھ یاتری موجود تھے . وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ جب سکھ برادری کی بات ہوتی ہے تو پھر یہ انسانیت کی بات کرتے ہیں، نفرتیں پھیلانے کی بات نہیں کرتے۔ ’ہمارے نبی پاک نے انسانیت کی بات کی۔‘ صوفیا کرام نے انسانیت کی بات کی۔ ’حضرت معین الدین چشتی، نظام الدین اولیا اور بابا فرید کے مزار پر آج بھی لوگ جا کر پیار و محبت کا اظہار کرتے ہیں۔‘



عمران خان کا کہنا تھا کہ انھیں ایک سال پہلے کرتارپور کی اہمیت کا اندازہ ہوا۔ عمران خان نے کہا کہ ’لیڈر ہمیشہ لوگوں کو اکھٹا کرتا ہے۔ وہ نفرتیں پھیلا کر ووٹ حاصل نہیں کرتا۔‘ انھوں نے اس موقع پر جنوبی افریقہ کے سابق صدر نیلسن منڈیلا کا خصوصی زکر کیا اور کہا کہ انھوں نے انسانوں کو اکھٹا کیا، ظالموں کا معاف کیا اور جنوبی افریقہ کو خون سے بچا لیا۔



وزیر اعظم عمران خان نے کہ ’ہمارا ایک ہی مسئلہ ہے کشمیر کا اور وہ ہم بات چیت سے حل کر سکتے ہیں۔ میں نے نریندر مودی کو کہا کہ ہم یہ مسئلہ کیوں نہیں حل کر سکتے۔‘ ان کا کہنا تھا کہ آج جو کشمیر میں ہو رہا ہے یہ خطے نہیں انسانیت کا مسئلہ ہے۔ ’80 لاکھ لوگوں کے تمام انسانی حقوق ختم کرکے انھیں نو لاکھ فوج سے بند کیا ہوا ہے۔‘ عمران خان نے کہا کہ اس طرح کبھی امن نہیں ہوگا۔ اس وجہ سے ہمارے سارے تعلقات رک گئے ہیں۔ انھوں نے انڈیا کے وزیر اعظم نریندر مودی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ’سارے برصغیر کو آزاد کردیں، انصاف کریں۔ سرحد کھل جائے تو برصغیر میں خوشحالی آئے گی‘۔



ان کا کہنا تھا کہ اگر کشمیر کا مسئلہ حل ہوجاتا جو کہ حل حو جانا چائیے تھا تو یہ نفرتیں نہ ہوتیں۔ وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ جس طرح تنازعات حل کر کے فرانس اور جرمنی خوشحال ہوئے اسی طرح ہم کشمیر کے مسئلے کے بعد برصغیر میں بھی اسی طرح کی خوشحالی آئے گی۔ ’وہ دن دور نہیں ہے۔‘ ان کا کہنا تھا کہ مجھے خوشی ہے کہ میں نے یہ دن آپ کے ساتھ منایا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ہم اندازہ لگا سکتے ہیں کہ آپ کے دل میں کس طرح کے تاثرات ہو سکتے ہیں، جب ہم مدینہ جاتے ہیں۔



اس سے قبل انڈیا کے شہر گرداس پور میں ڈیرہ بابا نانک میں ایک تقریب کے دوران انڈیا کے وزیرِ اعظم نریندر مودی نے کرتارپور راہداری کو حقیقت بنانے پر عمران خان کا شکریہ ادا کیا۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ کرتارپور راہداری سے ہزاروں سکھ یاتری مستفید ہوں گے۔
( بشکریہ : بی بی سی اردو )

فیس بک کمینٹ
Tags

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker