شاعریلکھاری

غزل : غم گساروں کی خیر ہو بابا ۔۔ زریں منور

غزل : غم گساروں کی خیر ہو بابا ۔۔ زریں منور

غم گساروں کی خیر ہو بابا
اِن سہاروں کی خیر ہو بابا

جِن کو ترسے ہیں ڈوبنے والے
اُن کناروں کی خیر ہو بابا

یہ دعا ہے سیاہ بختوں کی
چاند تاروں کی خیر ہو بابا

ہم کہاں التفات کے قابل
تیرے پیاروں کی خیر ہو بابا

جو نشیمن جلانے آئے ہیں!
اُن شراروں کی خیر ہو بابا

۔۔ زریں منور

فیس بک کمینٹ

متعلقہ تحریریں

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker