اختصارئےحسنین رضویلکھاری

حسنین رضوی کا اختصاریہ : مہاراجہ رنجیت سنگھ کا مجسمہ اور جاہل مولوی

آج لاہور میں ایک جاہل مولوی نے لبیک کا نعرہ لگاتے ہوۓ مہاراجہ رنجیت سنگھ کے مجسمے کو نقصان پہنچایا ، اس مولوی کو موقع پر موجود لوگوں اور گارڈ نے قابو کرلیا ، اب یہ مولوی پولیس کی حراست میں ہے ۔
کچھ عرصہ سے پاکستان میں اس طرح کے واقعات تواتر سے رونما ہوتے چلے آرہے ہیں ،ابھی کچھ روز پہلے رحیم یارخان کے علاقے ” بھونگ ” میں مندر کو نقصان پہنچایا گیا ،اس سے پہلے بلوچستان کے علاقے ” کرک ” کے مندر میں داخل ہوکر مورتیاں وغیرہ توڑی گئیں ، اسی طرح مردان کے علاقے ” تخت بائی ” میں کھدائی کے دوران بدھا کا ایک نایاب قیمتی مجسمہ دریافت ہوا جسے مقامی مولویوں نے یہ کہہ کر تڑوایا کہ جو اسے نہیں توڑے گا اس کا نکاح ٹوٹ جائے گا ، لہذا لوگوں نے اس مجسمے کو بھی توڑ ڈالا ۔ جب کہ اسلام آباد میں ہندووں کو سمادھی کیلیے الاٹ کی گئی جگہ پر کچھ متشدد عناصر نے حملہ کرکے اسے نقصان پہنچایا ۔
سپریم کورٹ اور حکومتی سطح پر نوٹس لینے پر اس طرح کے واقعات میں ملوث لوگوں کے خلاف کارروائیاں تو ہوجاتی ہیں ، مرمت وغیرہ بھی ہوجاتی ھے لیکن آج تک کسی شخص کو بھی سزا نہیں دی جاسکی ۔
حکومت سے مطالبہ ہے کہ ملک کی بدنامی کا سبب بننے والے اس قسم کے واقعات میں ملوث لوگوں کو سخت ترین سزا دی جاۓ ، جب تک ان جاہل لوگوں کو نشان عبرت نہیں بنایا جاۓ گا اس قسم کے واقعات کو روکا نہیں جاسکے گا اور اس سے زیادہ اہم بات یہ ہے کہ لوگوں کی تربیت پر توجہ دینے کی بھی ضرورت ہے اور انہیں بتانے اور باور کروانے کی ضرورت ہے کہ مجسمے تو صرف آرٹ کے نمونے ہوتے ہیں ان کی پرستش یا پوجا نہیں کی جاتی ،انھیں نقصان پہچانے سے نہ کوئی ثواب ہوتا ہے اور نا ہی نکاح کے ٹوٹنے یا جڑنے کا اس کارروائی سے کوئی تعلق واسطہ ہوتا ہے ۔ اس طرح کی کارروائی صرف اور صرف جہالت ہے اور کچھ نہیں ۔

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker