کالملکھاری

یہود مخالف حملو ں کے بعد پاکستان چھوڑالیکن آج بھی وہی سب کچھ جاری ہے:جمائما خان

ایک دہائی تک میڈیا اور سیاستدانوں کی جانب سے کیے جانے والے یہود مخالف حملوں (ہر ہفتے موت کی دھمکیوں اور گھر کے باہر احتجاج) کے بعد میں نے سنہ 2004 میں پاکستان چھوڑ دیا تھا۔ لیکن آج بھی وہی سب کچھ جاری ہے۔‘
وزیرِ اعظم عمران کی سابقہ اہلیہ جمائمہ گولڈ سمتھ جو سنہ 2004 میں عمران خان سے علیحدگی کے بعد پاکستان چھوڑ کر واپس برطانیہ منتقل ہو گئیں تھیں، کسی نہ کسی بہانے آئے روز عمران خان کے سیاسی مخالفین کی جانب سے پاکستان میں موضوع بحث رہتی ہیں اور اکثر جمائما کو ان کے خاندان اور مذہب کی بنیاد پر نشانہ بنایا جاتا ہے۔
گذشتہ رات جمائما گولڈ سمتھ نے یہ ٹویٹ مریم نواز کے بیان پر ردِعمل میں کی ہے۔
اب سے کچھ دیر قبل مریم نواز نے جمائما سمتھ کی اس ٹویٹ کا جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ ’مجھے آپ میں، آپ کے بیٹوں یا آپ کی ذاتی زندگی سے قطعاً کوئی دلچسپی نہیں ہے کیونکہ میرے پاس کہنے اور کرنے کو بہتر کام موجود ہیں لیکن اگر آپ کے سابق شوہر دشمنی میں دوسروں کے خاندانوں کو گھسیٹتے ہیں تو دوسروں کے پاس بھی کہنے کو سخت باتیں ہوں گی۔ آپ کو اگر کسی کو موردِ الزام ٹھہرانا ہے تو اپنے سابق شوہر کو ٹھہرائیں۔‘
سنہ 2004 میں ایسے کیا حالات تھے جنھوں نے جمائما کو پاکستان چھوڑنے پر مجبور کیا، اس کی تفصیل میں جانے سے قبل یہ جاننا ضروری ہے کہ اب آخر ایسا کیا ہوا کہ جمائما کو یہ ٹویٹ کرنی پڑی ہے؟
اس کے لیے ہمیں مسلم لیگ نواز کی نائب صدر مریم نواز اور وزیر اعظم عمران خان کی پاکستان کے زیرِ انتظام کشمیر میں کی گئی حالیہ تقاریر کو سُننا ہو گا۔
پاکستان کے زیر انتظام کشمیر میں عام انتخابات منعقد ہونے جا رہے ہیں، اسی لیے ملک کی بڑی سیاسی جماعتوں کی قیادت یہاں جلسے، جلوسوں اور ریلیوں میں مشغول ہے۔ سیاسی قیادت کی جانب سے ایک دوسرے کو نیچا دکھانے کے لیے نہ صرف سخت تنقید کی جا رہی ہے بلکہ ذاتی نوعیت کے حملے بھی جاری ہیں۔
اتوار کے روز کشمیر میں ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان نے علاج کی غرض سے برطانیہ جانے والے سابق وزیرِ اعظم نواز شریف کی لندن میں مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے بیٹے جنید صفدر کے پولو میچ کے دوران لی گئی تصاویر پر تنقید کرتے ہوئے کہا جنید صفدر کو اپنے نشانے پر لیا۔
عمران خان کا کہنا تھا کہ ’کمزور جیلوں میں جائے اور طاقتور این آر او لے لے اور باہر جا کر بیٹھ جائے اور اپنے پوتے کا پولو میچ دیکھے۔۔۔‘
’پوتا جو برطانیہ میں پولو میچ کھیل رہا ہے، میرے سے پوچھیے۔۔۔ آپ کے کشمیر سے کتنے لوگ باہر رہتے ہیں، میں آپ کے کتنے رشتہ داروں سے لندن اور مانچسٹر میں ملا ہوں، کبھی اُن سے پوچھیں کہ وہاں کس طرح کا انسان پولو کھیل سکتا ہے تو وہ آپ کو بتائیں گے کہ یہ بادشاہوں کا کھیل ہے۔‘
عمران خان کا کہنا تھا کہ ’عام آدمی پولو نہیں کھیل سکتا۔ برطانیہ میں گھوڑا رکھنا اور پولو کھیلنے کے لیے بڑا پیسہ چاہیے۔ تو یہ بتائیں کہ پوتا جی کے پاس اتنا پیسہ کدھر سے آیا؟‘
انھوں نے مجمعے کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا ’یہ آپ کا پیسہ ہے، یہ یہاں سے باہر گیا ہے۔‘
یاد رہے گذشتہ ماہ نواز شریف نے مریم نواز اور کیپٹن صفدر کے بیٹے جنید صفدر کا پولو میچ دیکھنے کیمرج گئے تھے اور اس موقع پر لی گئی تصاویر پاکستان میں سوشل میڈیا پر وائرل رہی تھیں
گذشتہ روز (پیر) مریم نواز نے بھی ایک عوامی جلسے کے دوران جنید صفدر پر کی گئی تنقید پر اپنا ردِعمل دیا۔
انھوں نے کہا ’وہ (جنید صفدر) وہاں کی پولو ٹیم کا کپتان بن کر پاکستان کی عزت میں اضافہ کر رہا ہے۔ وہ (عمران خان) کہتا ہے کہ نواسہ باہر جا کر پولو کھیل رہا ہے، وہ بچوں کو بھی نہیں بخشتا۔۔۔ وہ کہتا ہے جنید کے پاس پولو کے پیسے کہاں سے آئے ہیں۔‘
مریم نے مزید کہا کہ ’میں بچوں تک نہیں جانا چاہتی تھی لیکن جیسی بات کرو گے منھ توڑ جواب ملے گا۔۔۔ وہ (جنید صفدر) نواز شریف کا نواسہ ہے، وہ گولڈ سمتھ کا نواسہ نہیں ہے۔‘
مریم یہاں تک محدود نہیں رہیں بلکہ انھوں نے اس کے بعد ایک جملہ کہا جسے جمائما نے یہود مخالف قرار دیا۔
مریم نواز کی جانب سے اس ردعمل کے سامنے آنے کے بعد گذشتہ رات جمائما نے ٹویٹ کی۔ اپنی ٹویٹ میں انھوں نے مریم نواز کی جانب سے ادا کیے جانے والا جملہ دہراتے ہوئے لکھا کہ یہی وہ وجوہات تھیں جن کے باعث انھیں 2004 میں پاکستان چھوڑنا پڑا تھا۔
(بشکریہ: بی بی سی اردو)

فیس بک کمینٹ

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker