اہم خبریں

پاک بحریہ نے بھارتی آبدوز بھی بھگا دی

کراچی : پاکستانی بحریہ نے ایک انڈین آبدوز کی پاکستانی حدود میں داخلے کی کوشش ناکام بنادی ہے۔بحریہ کے ترجمان کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستانی سمندری زون میں انڈین آبدوز کی موجودگی کا سراغ لگایا گیا اور اسے پاکستانی پانیوں میں داخل ہونے سے روک دیا گیا۔ بیان کے مطابق انڈین آبدوز کی اپنی موجودگی کو خفیہ رکھنے کی ہر کوشش کو ناکام بنا دیا گیا۔اس سلسلے میں بحریہ کی جانب ایک ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے جس پر موجود ٹائم سٹیمپ کے مطابق یہ واقعہ پیر کی شب ساڑھے آٹھ بجے کے قریب پیش آیا۔
انڈین بحریہ کی جانب سے تاحال اس دعوے پر کوئی ردعمل سامنے نہیں آیا ہے۔پاکستانی بحریہ کا کہنا ہے کہ پاکستانی حکومت کی انڈیا کے ساتھ امن قائم رکھنے کی پالیسی کو مدنظر رکھتے ہوئے آبدوز کو نشانہ نہیں بنایا گیا۔بحریہ کے ترجمان کے مطابق نومبر 2016 کے بعد یہ دوسرا موقع ہے جب پاکستانی بحریہ نے انڈین آبدوزکا سُراغ لگایا ہے۔یہ واقعہ 14 نومبر 2016 کو پیش آیا تھا اور پاکستانی بحریہ نے دعویٰ کیا تھا کہ فلیٹ یونٹس نے پاکستانی سمندری حدود کے جنوب میں ایک انڈین آبدوز کا پتہ لگایا اور اسے پاکستانی پانیوں میں داخلے سے روک دیا تھا۔
تاہم انڈین بحریہ نے پاکستان کے اس دعوے کو مسترد کر دیا تھا۔
انڈین آبدوز کی جانب سے پاکستانی حدود میں داخلے کی مبینہ کوشش کا یہ واقعہ ایک ایسے وقت پیش آیا ہے جب پاکستان اور انڈیا کے مابین سرحدی کشیدگی عروج پر ہے۔یہ حالیہ کشیدگی پلوامہ میں انڈین نیم فوجی دستے کی گاڑی پر خودکش حملے کے بعد شروع ہوئی اور اس نے اس وقت زور پکڑا جب انڈین طیاروں نے پاکستانی فضائی حدود کی خلاف ورزی کرتے ہوئے بالاکوٹ کے قریبی علاقے میں بمباری کی۔
پاکستان نے اس کے جواب میں لائن آف کنٹرول کے پار انڈین اہداف کو نشانہ بنانے کا دعویٰ کیا اور اس کارروائی کے ردعمل میں پاکستان میں داخل ہونے والے انڈین طیاروں میں سے ایک کو مار گرایا جس کے پائلٹ ابھینندن کو حراست میں رکھنے کے بعد اب واپس انڈیا بھجوایا جا چکا ہے۔پاکستان اور انڈیا کو تقسیم کرنے والی لائن آف کنٹرول پر بھی فریقین کی جانب سے ایک دوسرے کو نشانہ بنانے کا سلسلہ بھی جاری ہے جس میں دونوں جانب ہلاکتیں بھی ہوئی ہیں۔

فیس بک کمینٹ
Tags

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker