پنجاب

ماضی کے نام ور ولن اسد بخاری انتقال کر گئے

لاہور : ماضی کے نامور اداکار اسد بخاری 14 اپریل کوانتقال کر گئے۔ان کی عمر 96 برس تھی ۔ اسد بخاری1924 میں گکھڑ منڈی میں پیدا ہوئے ، ان کا اصل نام سید اعجاز الحسن بخاری تھا۔ ہیرو کی حیثیت سے اپنے کیریئر کا آغاز کیا اور پھر ولن کے طور پر بھی اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوایا۔
اسد بخاری کی پہلی فلم ”ثریا“ تھی جس کے ہدایت کار شباب کیرانوی تھے۔پنجابی فلموں کے صف اول کے ولن تھے اور مظہر شاہ کے بعد زیادہ مقبولیت انہی کو ملی ۔مشہور فلموں میں” باغی“،” سپاہی“” لنڈا بازار“،” میرا ماہی“ ،” محلے دار“” باؤجی“ جنٹر مین ” روٹی“،” سجن پیارا“،”تیرے عشق نچایا“ ”مستانہ ماہی“،” سِردا بدلہ“ اور ”سوہنی مہینوال“ شامل تھیں، وہ دبنگ شخصیت کے مالک تھے، ان کے مکالمے بولنے کا اندازبہت متاثر کن تھا، گرجدار آواز سے ساتھی اداکاروں پر حاوی ہو جاتے، آسیہ اور عالیہ کے ساتھ بطور ہیرو بہت پسند کیا گیا۔ سب سے پہلے دھمال کو متعارف کرایا۔۔ ”دلاں دے سودے“ اور”آسو بلا“ کی کامیابی انہی دھمالوں کا نتیجہ تھی، برسوں پہلے فلموں سے کنارہ کش ہو گئے تاہم ان کی فنی خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker