اہم خبریں

کورونا وائرس سے بچاؤ : حرم شریف میں طواف رُک گیا

مکہ مکرمہ : سعودی حکومت کی جانب سے کورونا وائرس سے بچاؤ کیلئے اٹھائے جانے والے اقدامات کے باعث حرم شریف میں طواف کا سلسلہ عارضی طور پر رک گیا۔سوشل میڈیا پر جاری ہونے والی فوٹیجز میں دیکھا جاسکتا ہے کہ حرم شریف میں زائرین کو کورونا سے محفوظ رکھنے کو یقینی بنانے کی خاطر صفائی کی گئی اور جراثیم کش ادویات ڈالے گئے جس کی وجہ سے صحن شریف میں طواف کا عمل روک دیا گیا۔
حرمین شریفین پریزیڈنسی کے مطابق 1979 میں حرم شریف پر قبضے کے بعد یہ پہلا موقع ہے کہ طواف کا عمل روکا گیا ہے۔یاد رہے سعودی وزارت داخلہ نے گزشتہ روز اپنے شہریوں اور مملکت میں مقیم غیر ملکیوں کے بھی عمرہ ادا کرنے اور روضہ رسول ﷺ کی زیارت پر پابندی عائد کردی تھی۔
اس سے قبل سعودی حکومت بیرون ملک سے آنے والے عمرہ زائرین اور سیاحوں پر بھی پابندی عائد کردی تھی جس کا مقصد مہلک وائرس کو پھیلنے سے روکنا اور زائرین کے جانوں کے تحفظ کو یقینی بنانا ہے۔
خیال رہے کہ سعودی عرب میں کورونا وائرس کے آج مزید 3 نئے کیسز سامنے آئے ہیں جس کے بعد مملکت میں کورونا وائرس سے متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 5 ہوگئی ہے
سعودی پریس ایجنسی (واس) کے مطابق نئے مریض ایران سے آئے تھے۔ اس طرح ملک میں کورونا کے مریضوں کی تعداد پانچ ہوگئی ہے۔سعودی وزارت صحت نے کہا ہے کہ ’نئے مریضوں میں میاں بیوی شامل ہیں جو ایران سے براستہ کویت یہاں پہنچے تھے۔ سرحدی چوکی پر اہلکاروں سے ایران جانے کی بات چھپائی تھی‘۔
وزارت نے کہا ہے کہ ’کورونا کا تیسرا مریض ایران سے براستہ بحرین اسی سواری میں سعودی عرب پہنچا تھا جس میں میاں بیوی تھے‘۔
وزارت نے کہا ہے کہ ’اس سے قبل بدھ کو ایک اور مریض کا انکشاف ہوا تھا، وہ بھی ایران سے آیا تھا‘۔
وزارت نے بتایا ہے کہ ’اس طرح مجموعی طور پر کورونا کے پانچ مریض ہیں۔ سب کو وائرس ایران جانے پر لگا ہے‘۔
وزارت نے کہا ہے کہ ’کورونا کے مریضوں کا انکشاف سرحدی چوکیوں پر سخت حفاظتی تدابیر کے باعث ممکن ہوا ہے‘۔وزارت نے شہریوں اور غیر ملکیوں کو اطمینان دلاتے ہوئے کہا ہے کہ ’کورونا کے تمام مریض ہسپتال میں بالکل الگ قرنطینہ میں ہیں جن کا علاج جاری ہے‘۔وزارت نے کہا ہے کہ ’کورونا وائرس کے حامل افراد سے میل جول رکھنے والے تمام افراد کا معائنہ کیا جا رہا ہے جس کے نتائج سے عوام کو جلد آگاہ کیا جائے گا‘۔وزارت نے شہریوں اور مقیم غیر ملکیوں سے اپیل کی ہے کہ ’جو شخص بھی وبا زدہ علاقوں میں گیا ہو اسے چاہیے کہ وزارت صحت کے فری ٹول نمبر پر رابطہ کر کے اطلاع دے‘۔

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker