پنجاب

اسلام آباد:چائلڈ پورنو گرافی میں ملوث مجرم کو29 سال قید کی سزا سنادی گئی

اسلام آباد : ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے چائلڈ پورنو گرافی کے مقدمے میں گرفتار ملزم محمد اسحٰق کو مجموعی طور 29 سال قید کی سزا کے ساتھ 21 لاکھ روپے جرمانے کی سزا سنادی۔اسلام آباد کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت نے چائلڈ پورن گرافی کے مقدمے میں گرفتار ملزم پر جرم ثابت ہونے پر سزا سنائی۔
محمد اسحٰق پر الزام تھا کہ اس نے 4 بچوں کے ساتھ زیادتی کے بعد ویڈیوز بنائیں، مجرم محمد اسحٰق نے دانش افتخار کو میموری کارڈ دے کر ویڈیوز دیکھنے کا کہا تھا۔مجرم کے خلاف گولڑہ پولیس نے 29 جون 2020 میں مقدمہ درج کیا تھا۔

ایڈیشنل سیشن جج اسلام آباد ہمایوں دلاور نے مجرم محمد اسحاق کو مجموعی طور 29 سال قید کی سزا سنائی، اس کے ساتھ ساتھ مجرم کو مجموعی طور پر 21 لاکھ روپے جرمانہ کی سزا کا بھی حکم دیا گیا ہے۔
عدالت نے اپنے فیصلے میں مجرم محمد اسحاق کو بدفعلی کی دفعہ 377.بی میں 14 سال قید کی سزا کے ساتھ دس لاکھ جرمانہ عائد کیا گیا ہے جبکہ مجرم کو چائلڈ پورن گرافی کی دفعہ 292 بی میں بھی 14 سال قید کی سزا کے ساتھ دس لاکھ جرمانہ کی سزا سنائی گئی ہے۔عدالت کی جانب سے مجرم کو فحش ویڈیوز دکھانے کی دفعہ 292 اے میں ایک سال قید کی سزا اور ایک لاکھ روپے مزید بھی جرمانہ عائد کیا گیا ہے۔
( بشکریہ : ڈان نیوز )

فیس بک کمینٹ
Tags

متعلقہ تحریریں

Adblock Detected

Please consider supporting us by disabling your ad blocker